vni.global
Viral News International

پاکستان میں نیم مارشل لاء لگ چکا،ججوں کے فیصلوں پر عمل نہیں ہو رہا: عمران خان

لاہور: چیئرمین پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان میں نیم مارشل لاء لگ چکا ہے، فوجی عدالتوں میں شہریوں کے خلاف مقدمات چلیں گے تو مطلب جمہوریت تو ختم ہوگئی۔

برطانوی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے عمران خان نے کہا ہے کہ ان کے کئی کارکنوں کے خلاف تو ایف آئی آر بھی نہیں، نامعلوم کی فہرست میں ڈالا گیا ہے، وکیلوں کو گرفتار کارکنوں سے ملنے تک نہیں دیا جا رہا، ملک میں قانون نام کی کوئی چیز نہیں، ججوں کے فیصلوں پر عمل نہیں ہو رہا، وہ ضمانت دیتے ہیں تو حکومت پھر پکڑ لیتی ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ ملک طاقت کے زور پر چل رہا ہے، یہ منصوبہ بندی سے پی ٹی آئی کو کرش کرنا چاہتے ہیں، مقصد پی ٹی آئی کو ختم کر کے نواز شریف کو بحال کروانا ہے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کو  الیکٹ ایبلز  کی ضرورت نہیں، ہمارا سب سے بڑا ووٹ بینک ہے، جب ووٹ بینک اتنا ہو تو لوگوں کے آنے جانے سے فرق نہیں پڑتا، ووٹ بینک تو پاکستان ڈیموکریٹک موومنٹ (پی ڈی ایم) کا گرا ہے، جب بھی الیکشن ہوں گے پی ٹی آئی جیتے گی۔

چیئرمین پی ٹی آئی کا کہنا تھا کہ ہم نے تو 300 سے زائد کو ٹکٹ دئیے ہیں، باقی تو چھپے ہوئے ہیں، مذاکرات تو چلتے رہے ہیں لیکن دوسری جانب سے کوئی ریسپانس نہیں ہے، مذاکرات وہ چاہتے ہیں جو کوئی حل چاہتے ہیں، حل الیکشن ہیں اور وہ یہ نہیں چاہتے، اس سے بھاگ رہے ہیں، سب پی ٹی آئی سے ڈرے ہوئے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ الیکشن پاکستان کی ضرورت تھی، ملک ڈیفالٹ ہو رہا ہے اور تاریخ کی سب سے زیادہ مہنگائی ہے، آئین اور قانون ہمیں پرامن احتجاج کی اجازت دیتا ہے، حکومت نے پی ٹی آئی کے 23 ہزار کارکنوں کی فہرست بنائی، 10ہزار گرفتار ہوچکے ہیں، یہ مکمل فاشزم ہے، سپریم کورٹ کے 14 مئی کے حکم کے باوجود انتخابات نہیں ہوئے۔

ایک سوال کے جواب میں عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان کو ہمسایہ ملک کے ساتھ تعلقات اچھے رکھنے چاہئیں، افغانستان کی خواتین خود اپنے حقوق لے لیں گی، ہمیں ان کے معاملات میں مداخلت نہیں کرنی چاہیے، ہمیں اپنے فیصلے قومی مفاد میں کرنے چاہئیں۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.