vni.global
Viral News International

عمران خان اور شاہ محمود قریشی کی سائفر مقدمے میں ضمانت منظور

سپریم کورٹ کے قائمقام چیف جسٹس سردارطارق مسعود کی سربراہی میں تین رکنی بنچ کا فیصلہ

سپریم کورٹ نے سابق چیئرمین پی ٹی آئی اور شاہ محمود قریشی کی سائفر مقدمے میں ضمانت مںظور کرلی ، قائم مقام چیف جسٹس سردار طارق مسعود نے ریمارکس دیے شاہ محمود سمجھدارتھے سمجھتےتھے کیا بولنا ہے کیا نہیں،

سائفرسے متعلق کہا کہ بتا نہیں سکتا،سابق چیٸرمین پی ٹی آئی کوپھنسا دیا ،خود بچ گئے اورسابق چیٸرمین پی ٹی آٸی کوکہا کہ سائفرپڑھ دو، مزید ریمارکس دیے اسلام آباد ہائیکورٹ نےتوفیصلہ ہی کردیا ہے ماشااللہ ، اب خالی رسی ہی رہ گئی ہے ، جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے جس اندازمیں ٹرائل ہورہا پراسیکیوشن خود رولزکی خلاف ورزی کررہی ، کیا حکومت 1970 اور1977 والے حالات چاہتی ہے؟ ہردورمیں سیاسی رہنمائوں کیساتھ ایسا کیوں ہوتا ہے؟ اس وقت سابق چیٸرمین پی ٹی آٸی نہیں عوام کے حقوق کا معاملہ ہے سابق وزیراعظم پرجرم ثابت نہیں ہوا وہ معصوم ہیں، جسٹس منصورعلی شاہ نے کہاکہ نہ پراسیکیوٹرکوسمجھ آرہی ہے نہ تفتیشی افسرکوتوانکوائری میں کیا سامنے آیا ہے؟

قائمقام چیف جسٹس سردارطارق مسعود کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے درخواست ضانت پر سماعت کی سابق چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل سلمان صفدر نے موقف اپنایاکہ ایف آئی اے کے مطابق تحقیقات کے بعد سابق چیئرمین پی ٹی آئی پرمقدمہ درج کیا گیا سائفرکیس میں وزارت داخلہ کے سیکرٹری شکایت کنندہ ہیں وزارت خارجہ نے کوئی شکایت نہیں کی جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہقائمقام چیف جسٹس سردارطارق مسعود کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے درخواست ضانت پر سماعت کی سابق چیئرمین پی ٹی آئی کے وکیل سلمان صفدر نے موقف اپنایاکہ ایف آئی اے کے مطابق تحقیقات کے بعد سابق چیئرمین پی ٹی آئی پرمقدمہ درج کیا گیا سائفرکیس میں وزارت داخلہ کے سیکرٹری شکایت کنندہ ہیں وزارت خارجہ نے کوئی شکایت نہیں کی جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ وزارت خارجہ کبھی بھی کوڈزپرمبنی سائفروزیراعظم کونہیں دیتا وزارت خارجہ ترجمہ یا بریفنگ دیتی ہے سلمان صفدر نے بتایاکہ سائفرکسی کے ساتھ کبھی شیئرنہیں کیا گیا اعظم خان دوماہ لاپتہ رہے، یہ اغواء برائے بیان کا واقعہ ہے جسٹس اطہر من اللہ کے پوچھنے پر سلمان صفدر نے بتایاکہ تفتیشی افسرنے اعظم خان کی گمشدگی پرتحقیقات تحقیقات نہیں کیں ، سلمان صفدرنے پریڈ گراونڈ میں27 مارچ 2022 جلسے میں شاہ محمود قریشی کی تقریرپڑھی تو جسٹس سردار طارق مسعود نے ریمارکس دیے کہ وزیرخارجہ خود سمجھدارتھے سمجھتے تھا کہ کیا بولنا ہے کیا نہیں، وزیرخارجہ نے سائفرکاکہا کہ بتا نہیں سکتا اورسابق چیٸرمین کوپھنسا دیا کہ آپ جانیں اورسابق چیئرمین پی ٹی آئی جانیں شاہ محمود خود بچ گئے اورسابق چیٸرمین پی ٹی آٸی کوکہا کہ سائفرپڑھ دو، سلمان صفدر نے کہاکہ سابق چیٸرمین پی ٹی آٸی نے بھی پبلک سے کچھ شئیرنہیں کیا تھاجسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ اعظم خان کے بیان میں واضح ہے کہ وزیراعظم کے پاس موجود دستاویزسائفرنہیں تھی، شاہ محمود قریشی کے وکیل علی بخاری نے کہاکہ شاہ محمود قریشی پرواحد الزام تقریرکا ہے عدالت کے پوچھنے پر علی بخاری نے بتایاکہ شاہ محمود قریشی آج کاغذات جمع کرائیں گےجسٹس اطہرمن اللہ نے کہاکہ انتخابات میں حصہ لینا ہی ضمانت کیلئے اچھی بنیادہے پراسیکیوٹر رضوان عباسی نے دلائل دیے تو جسٹس اطہرمن اللہ نے ریمارکس دیے کہ سائفرکی ایک ہی اصل کاپی تھی جودفترخارجہ میں تھی ، سائفردفترخارجہ کے پاس ہے توباہرکسے نکلا ہے؟ ڈی کوڈ ہونے کے بعد بننے والا پیغام سائفرنہیں ہوسکتاسیکرٹری خارجہ نے وزیراعظم کو تحریری طورپرکیوں نہیں آگاہ کیا؟
قائمقام چیف جسٹس نے پوچھاکہ اعظم خان ایک ماہ خاموش کیوں رہا؟ جسٹس اطہرمن اللہ بولے کیا اعظم خان شمالی علاقہ جات گئے تھے؟ قائمقام چیف جسٹس نے پوچھاکہ شہبازشریف نے کس دستاویزپرقومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس کیاتھا؟ شہبازشریف نے کیوں نہیں کہا کہ سائفرگم گیا ہے؟
کیا اصل سائفرپیش ہوا تھا؟ یہ کیسے ممکن ہے؟ رضوان عباسی نے بتایاکہ ڈی کوڈ کرنے کے بعد والی کاپی سلامتی کمیٹی میں پیش ہوئی تھی جسٹس منصورعلی شاہ نے کہا کہ سائفرکیس میں سزائے موت کی دفعات بظاہرمفروضے پرہیں سائفرمعاملے پرغیرملکی قوت کوکیسے فائدہ پہنچا؟ قائم مقام چیف جسٹس نے کہاکہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے توفیصلہ ہی کردیا ہے ماشااللہ ، اب خالی رسی ہی رہ گئی ہے جسٹس منصورعلی شاہ نے پوچھاکہ سزائے موت کی دفعات عائد کرنے کی بنیاد کیا ہے وہ واضح کریں کسی گواہ کےبیان سےثابت نہیں ہورہا کہ کسی غیرملکی طاقت کوفائدہ ہوا ہے،تعلقات خراب کرنے کا توایف آئی آرمیں ذکرہی نہیں پراسیکیوٹررضوان عباسی نے کہاکہ بھارت میں سائفرلہرانے پربہت واویلا ہوا، جسٹس اطہرمن اللہ نے کہاکہ کل بلوچ فیملیزکیساتھ جو ہوا اس پرکیا کچھ واویلا نہیں ہوا ہوگا؟ کیاوزرائے اعظم کووقت سے پہلے باہرنکالنے سے ملک کی جگ ہنسائی نہیں ہوتی؟ کیا وزرائے اعظم کووقت سے پہلے ہٹانے پربھی آفیشل سیکریٹ ایکٹ لگےگا؟ عدالت نے سابق چیئرمین پی ٹی آئی اور شاہ محمود قریشی کی دس دس لاکھ روپے مچلکوں کے عیوض ضمانت منظور کرلی

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.